Close
گفتگو ڈاٹ پی کے پر خوش آمدید

کیا آپ کے باورچی خانے میں سونف ہے ؟

سیدہ عاصمہ علی

 

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
سونف کو زمانہ قدیم سے ہی سے صحت کے لئے فائدہ مند سمجھا جاتا ہے ہے جو کہ متعدد امراض کی روک تھام کے لئے مفید ہے چاہے اسے خام شکل میں استعمال کیا جاۓ یا پھر قہوے کی صورت میں پیا جاۓ۔ سونف باورچی خانے کی زینت ہونے کے ساتھ ساتھ بہت سے بیماریوں کا علاج ہے.

سونف کے خواص۔

مزاج گرم اور خشک ہے ۔ زیادہ استعمال نقصان دہ ثابت ہوتا ہے

ماہیت ۔۔

اس کا پودا دو سے تین فٹ اونچا اجوائن یا سوۓ کی طرح ہوتا ہے۔ اس کے پتوں اور بیج سے خاص قسم کی خوشبو آتی ہے۔ پتے چار پانچ حصوں میں منقسم ہوتے ہیں ان میں تخم لگتے ہیں۔ اس کے پتے، تخم اور جڑ بطور دواء مستعمل ہیں۔

مقامِ پیدائش

پاکستان میں پنجاب، سندھ جبکہ ہندوستان کے عموماً ہر حصے میں اسے کاشت کیا جاتا ہے اس کے علاوہ ترکی ، سائپرس، سپین اور روس میں اسکی کاشت ہوتی ہے۔

فوائد۔۔۔

سونف ایک خوشبودار بیچ ہے جیسے ہم مختلف کھانوں میں استعمال کرتے ہیں اس سے کھانا خوشبودار بنتا ہے۔ قدیم یونانی لوگ اس کا بہت استعمال کرتے تھے لیکن جدید دور میں بھی اس کے فوائد سے انکار نہیں کیا جاسکتا۔ خوشبودار ہونے کی وجہ سے اسے پان میں استعمال کیا جاتا ہے اس سے منہ کی بدبو دور ہوتی ہے۔

*سونف کھانا جلد ہضم کرنے میں مدد فراہم کرتی ہے۔
* سونف پیٹ کے درد میں مفید ہے اس سے پیٹ صاف ہوتا ہے۔
*بینائی تیز کرتی ہے بہرہ پن اور کانوں کے زخموں میں اس کا استعمال مفید ہے۔
*موٹاپہ کم کرنے میں مددگار ہے موٹاپے کا شکار حصے پہ اگر روغنِ سونف کی مالش کی جاۓ تو اس سے چربی کم ہوتی ہے ۔
*زکام کی صورت میں لونگ کے ساتھ پانی میں ابال کر پیا جائے تو فائدہ ہوتا ہے۔
*سونف کا جوشاندہ پیٹ کے مروڑ، ریاح اور قبض کو ختم کرتا ہے۔
*ایسی مائیں جنہیں دودھ کم آتا ہے اگر پانی میں سونف ملا کر پئیں تو دودھ کی مقدار بڑھائی جا سکتی ہے اس کے علاوہ عرق سونف لیکوریا اور حیض کے بے قاعدگی میں مفید ثابت ہوتا ہے۔
*عرقِ سونف جوڑوں کے درد اور سوجن میں مفید ہے۔
*جگر کی کمزوری، دماغی کمزوری، گردے کی پتھری، مثانے کا ورم اور دانت کے درد میں سونف کا استعمال فائدہ مند رہتا ہے۔
*خالی پیٹ سونف کھانے سے یاداشت ٹھیک رہتی ہے اور صبح نہار منہ سونف کا پانی پینے سے وزن کم کیا جاسکتا ہے

احتیاط۔۔۔

*چھ سال سے کم عمر کے کے بچوں کو سونف کا استعمال نہ کروائیں، مرگی کے مریض، حاملہ عورتیں اس سے اجتناب کریں کریں۔ اس کی پتیاں زیادہ مقدار میں استعمال کرنے سے نشہ ہو جاتا ہے۔

ٹوٹکے ۔۔۔

* سونف، مصری، بادام پیس کر ایک چمچ سفوف دودھ کے ساتھ صبح شام استعمال کرنے سے نظر کی کمزوری دور ہوتی ہے۔
* سونف 12 گرام، اجوائن12 گرام اور کالانمک 6گرام صاف کر کے پیس لیں اور کھانے کے بعد استعمال کریں اس سے معدہ درست ہوگا، بھوک بڑھے گی اور کھانا جلد ہضم ہو گا۔
*نزلہ زکام کے لیے ایک تولہ سونف کوٹ کر آدھا کلو پانی میں بھگو کر تین گھنٹے جوش دیں جب آدھا پاؤ پانی رہ جاۓ تو چینی ملا کر صبح شام پئیں ۔
*دمہ میں ایک تولہ سونف آدھا سیر پانی میں جوش دیں آدھا رہ جائے تو شہد ملا کر پئیں ہر قسم کی کھانسی کے لیے مفید ہے۔
*ایک گرام سونف کو آدھا گلاس پانی میں گرینڈ کرلیں اس میں شکر اور سفید مرچ کا سفوف شامل کرکے صبح شام پینے سے سر درد اور چکر میں افاقہ ہوگا۔
*سونف کی چائے وٹامن اے، سی اور ڈی کے ساتھ اینٹی اکسائیڈئیس سے بھرپور ہوتی ہے۔ جسمانی وزن میں میں کمی کیلئے لئے بہترین ہے، ہاضمے کو بہتر کرتی ہے، اس سے جسم میں گلوکوز کی کی سطح متوازن رہتی ہے ، اضافی سیال کو خارج کرنے میں اور جگر کے افعال کہ درستگی میں مددگار ثابت ہوتی ہے اسکے ساتھ دھڑکن کو بھی نارمل رکھنے میں معاون ثابت ہوتی ہے ۔

اس تحریر کے بارے میں اپنی راۓ دیں اور گفتگو ڈاٹ پی کے سے جڑے رہیں۔

سیدہ عاصمہ علی

ادب سے اتنا تعلق ہے کہ جس عمر میں بچے پریوں کی کہانیاں پڑھتے ہیں میں نے زندگی کی حقیقتوں کو پڑھا اور اتنا پڑھا کہ گھبرا کہ پریوں کہ دیس میں پناہ لے لی.. اب تک حقیقتوں سے منہ چھپائے بیٹھی ہوں.. زندگی جب وہاں سے باہر کھینچ لاتی ہے تو درد الفاظ بنکے بکھر جاتے ہیں آس پاس چاہے وہ اپنے ہوں یا کسی اور کہ... بس اتنا تعارف ہے کہ سلجھی ہوئی دنیا میں الجھی ہوئی لڑکی ہوں....

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

0 Comments
scroll to top