کیا آپ کے باورچی خانے میں سونف ہے ؟

سیدہ عاصمہ علی   ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ سونف کو زمانہ قدیم سے ہی سے صحت کے لئے فائدہ مند سمجھا جاتا ہے ہے جو کہ متعدد امراض کی روک تھام کے لئے مفید ہے چاہے اسے خام شکل میں استعمال کیا جاۓ یا پھر قہوے کی صورت میں پیا جاۓ۔ سونف باورچی خانے کی زینت ہونے کے […]

October 29, 2019

چہل قدمی کے فوائد

حضرت حسن رضی اللہ عنہ سے روایت ہے کہ حضور اقدس صلی اللہ علیہ وسلم چلنے کیلئے قدم اٹھاتے تو قوت سے پاﺅں اکھڑتا تھا اور قدم اس طرح رکھتے کہ آگے جھکنا پڑتا اور تواضع کے ساتھ قدم بڑھا کر چلتے۔ چلنے میں ایسا معلوم ہوتا کہ گویا کسی بلندی سے پستی میں اتر […]

October 5, 2019

عشق۔۔ طلسم کدہ

آنکھوں کی پتلیوں سے پرے، دنیا کہ دیکھنے والے آئینوں کے پار ایک الگ دنیا بسائی ہے اس نے ۔۔ اس طلسم کدہ میں وادیِ عشق کے جادوئی دروازے سم سم کے اذن کے بناء ہی کُھلتے چلے جاتے ہیں ۔۔ وہ پورے طمطراق کے ساتھ قدم دھرتی پاؤں میں موجود پائل کے گھنگھرو بجے، […]

September 18, 2019

دیہاڑی

صبح کے دس بج رہے تھے اور گھر میں نوکروں کی کام کرنے کی معمولی سی کھٹ پٹ کے علاوہ کوئی آواز سنائی نہیں دیتی تھی.. اتنے میں ماسٹر بیڈ روم کا دروازہ کُھلا اور ایک نازک اندام وجود دروازے سے نمودار ہوا.. کمرے میں چلتے ائیرکنڈیشن کی ٹھنڈک نے راہداری کو بھی سرد کیا۔۔۔ مکمل تحریر پڑھنے کیلئے لنک پہ کلک کریں ۔۔۔

اطمینان

وقت کے پہیے کو الٹا گھماتی ہوئی تمہارے لہجے کی نرمی کو تلاشتی میں وہاں پہنچی جہاں تمہارے جہاں تمہارے صبح کے کچھ لفظوں پہ مجھے اپنے دل کے لاپتہ ہونے کا ادراک ہوا تھا… تو جھرنوں جیسی ایک ہنسی سن کہ ٹھٹھک گئی پلٹ کے اس ہنسی کے منبع کو دیکھنے کی ہمت نہ […]

April 25, 2019

محبت ہم

محبت خواب کی مانند کُھلی آنکھوں میں بستی ہے سنورتی ہے چمکتی ہے کئی بہروپ بھرتی ہے کبھی بارش کی بوندوں میں چھنکتی ہے کسی پازیب کی مانند کبھی آہٹ کی صورت میں اُبھرتی ہے کسی آسیب کی مانند کبھی چاہے تو تیری بند مُٹھی میں سما جاۓ کبھی آئی پہ جو آۓ پوری دنیا […]

April 7, 2019

نحوست

تم آتے جاتے اپنی دیدار کے کچھ سکے میری چادر میں پھینک دینا پھر چاہے وہ بے وفائی کے زنگ سے اَٹے ہوں یا پھر لفظوں کی بے ایمانی کی طرح کھوٹے ہوں مجھے بَھلا فرق کیوں پڑے گا یہ سب خسارے تو روزِ اول سے روشن تھے۔۔۔ مکمل تحریر پڑھنے کیلئے لنک پہ کلک کریں

ادھوری ملاقات

بس ایک نظر میرے مالک بس ایک نظر کی بھیک مانگ رہی ہوں، دل کُرلایا، نگاہ پہ آنسوؤں نے دھند تانی.. اور پھر دامن کو بھرنے کا اذن ملا، قدم پتھر ہوئے نظروں نے محبوب کو دیکھ لیا، وقت تھما آس پاس کے سب منظر کہیں غائب ہو گئے دنیا میں فقط کچھ تھا تو وہ دو نگاہیں تھیں جو محبوب کی آنکھوں کو کھوج رہی تھیں۔۔ ادھوری ملاقات کا مکمل احوال پڑھنے کیلئے لنک پہ کلک کریں ۔

February 21, 2019

خیالی خط

سنو.. کیوں آئی تم میری زندگی میں جب چاہ کر بھی نہیں آنا تھا، پانا نہیں تھا، یہ فاصلے کورئیر سروس سے ختم نہیں ہوتے جانتی ہو نا؟؟ مکمل تحریر پڑھنے کیلئے لنک پہ کلک کریں ۔

February 13, 2019